55

لاہور : مختلف ریستوران سیل ، 2 کو جرمانے ، 5 کو وارننگ جاری

لاہور (ساہیوال نیوز – 14 جنوری 2020 – سید طمطراق شاہی) کھانا ہر شخص نے کھانا ہے تاہم کھانا اگر لذیذ اور ذائقہ بخش ہو تو پھر کیا ہی کہنے۔ دنیا بھر میں کھانے کے دلدادہ افراد ایسی جگہوں پر جانے کو ترجیح دیتے ہیں جہاں مزیدار کھانا ملتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ اچھا کھانا مہیا کرنے والی مشہور’’بٹ کراہی‘‘ نے لاہور میں بڑی تیزی سے نام کمایا ہے اور شہر بھر میں اپنے کئی ریسٹورانٹس کھول رکھے ہیں۔ اور ساتھ ہی ساتھ دیگر کئی ریسٹورانٹ کھانے کا ذائقہ بڑھانے کی کوشش میں مصروف نظر آتے ہیں۔

تاہم لاہور میں مقبول و معروف کئی ریسٹورنٹس کو بند کر دیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ڈی جی فوڈ کی جانب سے شہری کے مختلف علاقوں کے دورے کئے گئے جس کے بعد معروف ریسٹورانٹ پر چھاپے مار کے ناقص انتظامات پر کئی ریسٹورانٹ کیخلاف کارروائی کی گئی۔

ڈی جی فوڈ کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ شہر بھر میں ناقص فوڈ کیخلاف کارروائی کرتے ہوئے 4 فوڈ پوائنٹس کو سیل کردیا گیا جبکہ 2 پوائنٹس کو جرمانے عائد کئے گئے ہیں۔ نجی ٹی وی پر جاری رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ڈی جی فوڈ اتھارٹی نے بٹ کراہی سمیت 5 ریسٹورانٹ کو وارننگ جاری کر دی ہے جبکہ بٹ کراہی کے ایک ریسٹورانٹ کو بند کر دیا گیا ہے ۔ فوڈ اتھارٹی کا کہنا ہے کہ معروف بٹ کراہی کو حشرات کی موجودگی اور ناقص صفائی پر سیل کیا گیا۔

جبکہ فضل حق ڈیرہ کو واش روم میں اشیائے خورد نوش سٹور کرنے اور بدبودار ماحول کی بنا پر سربمہر کردیا گیا۔ ڈی جی فوڈ اتھارٹی عرفان میمن کا کہنا ہے کہ کارروائی دوران کھلے مصالحہ جات ، گندے فریزر کے استعمال اور بدبودار ماحول کی بنا پر پاک ایشیا ، دیسی کڑاہی کو سربمبر کرد یا گیا۔ ڈی فوڈ کا کہنا ہے کہ ریسٹورانٹ چھوٹا ہو یا بڑا حفظان صحت کے اصولوں کے عین مطابق کام کرنا ہوگا۔

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں