67

تھکان اسکی اقسام اور تھکان کم کرنے کے طریقے

تحریر : احسن علی فیزیکل انسٹرکٹر
تھکان ایک ایسا عمل ہے جس میں جسم مسلسل تھکاوٹ درد اور بے چینی کی حالت میں رہتا ہے روز مرہ کے کاموں کے دوران تھکن محسوس ہوتی ہے اکثر اوقات کام ادھورے رہ جاتے ہیں. تھکان کی وجہ سے جسم کوئی بھی کام کرنے کے لیے جلدی تیار نہیں ہوتا.

تھکان کی دو اہم اقسام ہیں

1جسمانی تھکان

2 ذہنی تھکان

*1جسمانی تھکان*
جسمانی تھکان عام طور پر ہر طرح کے افراد کو ہو جاتی ہے، کسی ایک کام کو مسلسل کرنے سے، اپنی جسمانی صلاحیت سے بڑھ کر کوئی کام کرنے سے، بیماری کی وجہ سے، خون کی کمی کی وجہ سے جسمانی تھکان کا مسئلہ ہو سکتا ھے
جسمانی تھکان کی وجہ سے جسم چھوٹے چھوٹے کام کرنے سے بھی قاصر ہو جاتا ہے.کوی بھی کام کرنا ہو اسکو کرنے کی سکت نہیں ہوتی.ہر وقت جسم کے کسی نہ کسی حصے میں درد محسوس ہوتا ہے. پٹھوں میں کھچاؤ کا احساس ہوتا ہے
جسمانی تھکان کا بہترین حل مناسب خوراک، ورزش، آرام، مالش اور کام کے دوران بہتر منصوبہ بندی سے دور کیا جا سکتا ہے

*2 ذہنی تھکان*

یہ تھکان کی زیادہ توجہ طلب قسم ہے جس پر ہم لوگ زیادہ تر دھیان نہیں دیتے. بلکہ اس کو جسمانی تھکان میں ضم کر کے اپنے لیے مزید مشکلات کھڑی کر لیتے ہیں. کم خوابی، ڈپریشن،ہایپر ٹینشن،ضرورت سے زیادہ حساس ہونا، بہت زیادہ سوچنا اور اسکے علاوہ شور والی جگہوں پر کام کرنا وغیرہ ذہنی تھکان کا سبب بنتے ہیں.

ذہنی تھکن کم خوابی، چڑ چڑا پن، عدم توجہی اور بلڈ پریشر کا باعث بن جاتی ہے. اس سے نپٹنے کا بہترین حل ہے کہ خود کو اتنا مضبوط بنا لیا جائے کہ کسی قسم کی پریشانی آپ کے لا شعور پر حاوی نہ ہو سکے. باتوں کو برداشت کرنا اور درگزر کرنا سیکھیں. مناسب نیند لیں. اگر آپ شور والی جگہوں پر کام کر تے ہیں تو گھر آکر کم ازکم ایک گھنٹہ اکیلے ریسٹ لازمی کریں. ہر ٹینشن میں یہ بات یاد رکھیں کہ آپکی پہلی ترجیح آپکی زندگی اور ذہنی و جسمانی تندرستی ہے. اگر آپ خود کو تندرست رکھنے کے لیے اقدامات کریں گے تو ایک پرسکون زندگی گزار سکیں گے

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں