ڈرامہ سیریل یہ دل میرا (بیسٹ سین)

 ڈرامہ سیریل یہ دل میرا (بیسٹ سین)

ڈاکٹری دنیا کا مشکل ترین پیشہ ہے اور تشخیص کامیابی کی پہلی سیڑھی۔ وہی ڈاکٹر کامیاب ڈاکٹر کہلاتاہے جو مرض کی ٹھیک ٹھیک تشخیص کر لیتا ہے۔

بہت سے عوامل درست تشخیص کی راہ میں حائل ہوتے ہیں۔ بعض اوقات مریض کے قریبی لوگ مرض کے بارے میں ڈاکٹر کو اندھیرے میں رکھتے ہیں۔

لیکن کامیاب ڈاکٹر اپنے پیشنٹ کے گھر والوں کو بھنک تک نہیں لگنے دیتا کہ وہ ان کی جانب سے چھپائی گئی ہر بات جانتا ہے۔ کچھ ایسا ہی منظر ہمیں یہ دل میرا ڈرامہ میں دیکھنے کو ملتا ہے۔ اور یہی منظر شاید اس ڈرامہ کا بیسٹ سین ہے۔

نور العین خواب میں پھر ریلوے اسٹیشن کا منظر دیکھتی ہے جہاں وہ جان بچانے کے لیے بھاگ رہی ہے، اگلے روز آغا جان سائیکاٹرسٹ سے اپنی بیٹی کے نائٹ میئرز کے بارے میں گفتگوکرتا ہے۔

ڈاکٹر جب آغا جان کی بات سن رہا ہوتا ہے توہمیشہ کی طرح کچھ باتیں نوٹ کرتا ہے۔ لیکن وہ کیا لکھتا ہے یہ اچانک کیمرہ زوم کے ذریعے ایک سیکنڈ کے لیے دکھایا جاتا ہے۔ یہ دیکھیے بظاہر آغا جان کی ہاں میں ہاں ملانے والا ڈاکٹر کیا لکھتا ہے۔ ڈاکٹر لکھتا ہے کہ آغا جان ہمیشہ کی طرح جھوٹ بول رہا ہے۔

ڈاکٹر شاید نورالعین کی بیماری کے بارے میں مزید بہت کچھ جانتا ہے لیکن انجان بنتا ہے۔ وہ شاید آغا جان کو بھی پہچان چکا ہے۔ کم ازکم اس کی تحریر سے تو یہی لگتا ہے۔ میرے خیال میں یہ اس ڈرامہ کا بیسٹ سین ہے۔

جذبات ، احساسات، نفسیات اور انتقام کے گرد گھومتایہ ڈرامہ اپنی بارہ اقساط پوری کر چکا ہے۔ شیکسپیئر کے شہرہ آفاق ڈرامہ ہیملٹ کی طرح اس ڈرامے کا مرکزی کردار امان بھی "ٹو بی اور ناٹ ٹو بی” کے درمیان الجھ گیا ہے۔

دیکھتے ہیں رائٹر اس کے ساتھ کیا کرتا ہے، اور نورالعین کی قسمت کے بارے میں رائٹر نے جو بھی لکھا ہو اس کے بارے میں یہی کہا جا سکتا ہے۔

توڑ ڈالیں قلم تو بہتر ہے
نہ لکھیں راز غم تو بہتر ہے۔

Saad

https://sahiwalnews.com.pk

سعد رمضان ہمیں ساہیوال و گردونواح کی خبروں سے اپڈیٹ رکھتے ہیں۔

مزید پڑھیے

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے